24

انشورنس کمپنیاں شہریوں کو دونوں ہاتھوں سے لوٹنے لگیں

ڈجکوٹ(نامہ نگار)مہنگائی سے تنگ عوام کو انشورنس کمپنیاں بھی لگے ہاتھوں لوٹنے لگیں ، شہری سراپا احتجاج بن گئے ، تفصیل کے مطابق انشورنس کمپنیوں نے سادہ لوح عوام کو پھنسانے کیلئے نیا جال بچھا رکھا ہے اور اب نجی بنکوں میں بھی ان کے ایجنٹ کلائنٹس پر نظریں جمائے رکھتے ہیں جو معمولی مفاد کیلئے شہریوں کی جمع پونجی کا بیڑا غرق کرا دیتے ہیں’ ڈجکوٹ کے رہائشی نوید احمد اپنی اہلیہ کے ساتھ ڈجکوٹ میں نجی بنک میں کیش نکلوانے آئے تو مینجر نے بہلا پھسلا کر انشورنس کر دی اب پلان میچور ہونے پر نوید بنک میں گیا تو مینجر نے نئی کہانی سنا دی شہری کے پچیس لاکھ روپے جمع ہوئے تھے اور اس کو پلان کے مطابق پچاس لاکھ روپے کے قریب پیسے ملنے تھے لیکن مینجر نے 18 لاکھ بتایا، شہری سر پیٹ کر رہ گیا کہ اس کی زاتی رقم 25 لاکھ ہے اور پرافٹ کی بجائے اسکی اداکی گئی رقم سے بھی محروم کیا جارہا ہے یاد رہے کہ صرف ڈجکوٹ میں ایسے متاثرین درجنوں میں ہیں شہری نے حکام بالا سے کاروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں