26

تحریک انصاف کو مینار پاکستان پر جلسہ کرنیکی اجازت

لا ہو ر (بیوروچیف )پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کو مینار پاکستان پر جلسہ کرنے کی اجازت دے دی گئی۔ضلعی انتظامیہ کی جانب سے پی ٹی آئی سے حلف لینے کے بعد جلسے کی اجازت دی گئی ہے، ڈپٹی کمشنر لاہور کی جانب سے اجازت کا باقاعدہ نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا ہے۔دوسری جانب پاکستان تحریک انصاف نے 25 مارچ کی رات9 بجے ہی کارکنان کو جلسہ گاہ پہنچنے کی ہدایت کر دی،پی ٹی آئی نے کہا کہ جلسہ 25مارچ کی رات نوبجے شروع ہو گا، چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کا خطاب رات بارہ بجے کے بعد 26مارچ کو ہوگا۔قبل ازیں چیئرمین پی ٹی آئی نے اپنے ایک ویڈیو بیان میں کہا کہ ہفتے کو مینار پاکستان جلسہ ایک ریفرنڈم ہوگا، قوم بتائے گی کہ وہ کدھر کھڑی ہے، یہ تاریخی جلسہ ہوگا، ہفتے کے روز آپ ایک جاگی ہوئی قوم کو دیکھیں گے، پوری قوم اس جلسے کو یاد رکھے گی، اگریہ ملک پر بیٹھے رہے تو آپ کا کوئی مستقبل نہیں، جتنے پیسے ہم نے آئی ایم ایف سے لینے ہیں اس سے زیادہ ان کے باہر پڑے ہیں۔نوٹی فکیشن کے مطابق جلسے کے دوران پبلک پراپرٹی کو نقصان پہنچنے کی صورت میں پی ٹی آئی کی متعلقہ انتظامیہ ذمہ دار ہوگی، ساؤنڈ سسٹم کے استعمال سے متعلق متعلقہ قانونی دفعات کی پاسداری کی جائے گی۔اجازت نامے کے مطابق جلسے کے دوران پی ٹی آئی عہدیداران، رضا کار ضلعی انتظامیہ کے ساتھ مکمل تعاون کریں گے، جلسے کے باعث کسی بھی جگہ کاروباری مراکز بند کرانے اور نقصان پہنچانے کی اجازت نہیں ہوگی، جلسہ میں کارکنوں اور تمام متعلقہ افراد ڈنڈے یا اس سے متعلقہ کوئی چیز ساتھ نہیں لاسکیں گے۔اجازت نامے میں ہدایت کی گئی ہے کہ جلسہ گاہ اور اطراف میں کسی بھی قسم کے اسلحہ کے نمائش کی اجازت نہیں ہوگی، جلسہ میں شامل افراد کے لیے مناسب پارکنگ کا انتظام کیا جائے گا، دوسرے اضلاع سے آنے والے شرکا لاہور انتظامیہ کی تمام شرائط پر عمل کریں گے۔نوٹیفکیشن کے مطابق جلسہ انتظامیہ اسٹیج، خواتین اور تمام انکلوڑز کی سیکیورٹی کی ذمہ دار پی ٹی آئی ہوگی اور جلسہ گاہ میں بلا تعطل بجلی فراہمی یقینی بنائے گی، عدلیہ اور اداروں کی خلاف تقاریر کی اجازت نہیں ہوگی۔اجازت نامے میں کہا گیا ہے کہ سیکیورٹی کو بہتر بنانے اور ٹریفک کی آمد و رفت کو برقرار رکھنے کے لیے پی ٹی آئی ذمہ داران ضلعی انتظامیہ اور ٹریفک پولیس کے ساتھ مکمل تعاون کریں گے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں