28

قبرستانوں میں پختہ قبروں کی تعمیر پر پابندی کی تجویز

سرگودھا (بیوروچیف) حکومت کی جانب سے قبرستانوں میں پختہ قبروں کی تعمیر پر پابندی کی تجویز زیر غور ہے تاکہ قبرستانوں میں مردے دفن کرنے میں پریشانی کا سامنا نہ کرنا پڑے ایک پختہ قبر تین قبروں کی جگہ گھیر لیتی ہے جس سے قبرستانوں میں جگہ کم پڑتی جارہی ہے ان خیالات کا اظہار وزیر مملکت و وفاقی پارلیمانی سیکرٹری و رکن قومی اسمبلی چوہدری حامد حمید نے کیا انہوں نے کہا کہ حکومت نے تمام قبرستانوں کی انتظامیہ کو پختہ قبریں تعمیر کرنے پر پابندی کے عمل کو یقینی بنانے کیلئے بھی اقدامات شروع کردیئے ہیں اور جو پختہ قبریں ہیں ان کے لواحقین سے کہا جائیگا کہ وہ اپنے پیاروں کی قبریں خود مسمار کرکے انہیں کچہ کریں تاکہ آنیوالے مردوں کیلئے پریشانی نہ ہو چوہدری حامد حمید نے کہا کہ سرگودھا سمیت ضلع بھر کے قبرستانوں میں پختہ قبروں کی بھرمار کی وجہ سے قبرستانوں میں جگہ کم پڑتی جارہی ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں